ٹک ٹاک کو عروج پرپہنچانے والے چیف ایگزیکٹو افسر مستعفی ہوجائیں گے


ہانگ کانگ : سوشل میڈیا پر چھوٹی ویڈیوز شیئر کرنے کے حوالے سے معروف ایپ ٹک ٹاک کو بام عروج پرپہنچانے والے نوجوان چیف ایگزیکٹو افسر مستعفی ہونے جارہے ہیں۔

غیر ملکی خبر رساں اداروں کی رپورٹس کے مطابق معروف ایپ ٹک ٹاک کو بام عروج پرپہنچانے والے نوجوان چیف ایگزیکٹو افسر ژینگ یمنگ نے بلٹ بائیٹ ڈانس کے لئے یہ کمپنی قائم کی اب یہ کمپنی ٹیکنالوجی کی فیلڈ میں بڑے ناموں میں سے ایک نام ہے ۔ وہ اڑتییس سال کی عمر میں عہدے سے اس وقت مستعفی ہونے جارہے ہیں جب کمپنی اپنے عروج پر پہنچ چکی ہے وہ اس سال کے اختتام پرعہدہ چھوڑ دیں گے۔

ژینگ کی ملاقات ٹک ٹاک کے مالک بائیٹ ڈانس سے سال قبل بیجنگ میں ملاقات ہوئی تھی۔ یانگ یمنگ نے گذشتہ روز اعلان کیا تھا کہ اس سال کے اختتام پر ان کا کمپنی میں ایک اورمختلف کردار ہوگا اور وہ طویل المدتی حکمت عملی بنائیں گے۔ یانگ نے کمپنی کے ملازمین کو لکھے گئے خط میں کہا ہے کہ اس سال کے آغاز سے میں نے طویل المدتی پیشرفت کے حوالے سے کافی سوچا ہے ۔

کمپنی نے ژینگ کا خط عوام کیلئے شائع کردیا ہے۔ جس میں یان نے مزید کہا ہے کہ انہوں نیکئی ماہ سوچنے کے بعد یہ فیصلہ کیاہے کہ وہ ہر گزرتے دن کے ساتھ ذمہ داریوں کو چھوڑتے جائیں گے جس کا ان کی طویل المدتی اقدامات پر بہت بڑا اثر ہوگا۔
خط میں ژینگ کا کہنا ہے کہ حقیقت یہ ہے کہ مجھ میں آئیڈیل کافی مہارتوں یعنی سکلز کی کمی پائی جاتی ہے جو ایک آئیڈیل مینیجر میں ہونی چاہیئں۔ میں بہت زیادہ سماجی نہیں ہوں، میں پڑھنے، سننے اور موسیقی سمیت تمام ممکن سرگرمیاں آن لائن کرتا ہوں،

اگر افسرژینگ یمنگ مستعفی ہوتے ہیں تو ان کی جگہ بائیٹ ڈانس کمپنی کی بنیاد رکھنے میں شامل لیانگ روبو سی ای او کے عہدے پر فائز ہوسکتے ہیں ،آج کل وہ ہیومن ریسورس ڈپارٹمنٹ کے سربراہ ہیں

رپورٹ کے مطابق ژینگ یمنگ کا رخصت ہونے کا فیصلہ عجیب معلوم ہوسکتا ہے ، خاص طور پر جب ان راہوں کے مقابلے میں جب ان کے ہم منصبوں نے مغربی ٹیک کمپنیوں میں شرکت کی۔ بائٹ ڈانس نے پچھلے دو سالوں میں ایک معمولی اضافہ دیکھا ہے۔