قائد اعظم نے اسرائیل کو ناجائز ریاست قراردیا تھا پاکستان نظریاتی ملک ہے،عبدالرشید ترابی


باغ:کنونیئر کل جماعتی کشمیر رابطہ کونسل صدر ملی یکجہتی کونسل وچیئرمین پبلک اکائونٹس کمیٹی عبدالرشید ترابی نے کہا ہے کہ وزیر اعظم پاکستان نے قبلہ اول اور فلسطین کے حوالے سے جو موقف اختیار کیا ہے اس پر استقامت دیکھائیں ،قائد اعظم نے اسرائیل کو ناجائز ریاست قراردیا تھا پاکستان نظریاتی ملک ہے وہ قائد اعظم کی فلسطین پالیسی اور موقف کو لے کر چلے ،کورونا وائرس بڑی آزمائش ہے اس سے نجات کا واحد راستہ رجوع الی اللہ اور احتیاط ہے۔

ان خیالات کااظہار انہوں نے جمعہ کے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کیا ،انہوں نے کہاکہ اللہ کو راضی کریں گے تو ہم آزمائش سے نکلیں گے اللہ کی نافرمانی کے باعث پوری امت بلکہ انسانیت بڑی آزمائش سے دوچار ہے پوری انسانیت کو اللہ کی طرف رجوع کرنا ہو گا۔

مزید پڑھیں:آزادی کے حصول کیلئے کشمیریوں کو خود کردار ادا کرنا ہو گا ،عبدالرشید ترابی

انہوں نے کہاکہ بیت المقدس مسلمانوں کے عقیدے کا مسئلہ ہے ہم نے اسمبلی میں فلسطین کے ساتھ یکجہتی کے لیے قرارداد پیش کی تو فلسطین کے سفیر نے بتایا کہ فلسطین کے عوام حکمران اور اپوزیشن جماعتیں خوش ہیں اور ہم سب مل کر قابض اسرائیل کے خلاف جدوجہد کریں گے۔

عبدالرشید ترابی نے کہاکہ کشمیراور فلسطین کا مقدمہ ایک ہے اگر ہم فلسطین کے مقدمے کی حمایت کریں گے تو اس سے مقدمہ کشمیر کو بھی تقویت ملے گی اگر ہم ایک جگہ کمپرمائز کریں گے تو یہاں بھی کمپرمائز کرنا پڑے گا۔

انہوں نے کہا کہ مغربی استعمار نے ساری دنیا سے صہیونیوں کو جمع کر کے فلسطین میں لایا اور فلسطینیوں کی زمینوں پر قبضہ کر کے اسرائیلی ریاست قائم کی گئی ،پاکستان ظلم اور جبر پر قائم کی گئی ریاست کو کبھی بھی تسلیم نہیں کرے گا اور یہ دنیا کے ضمیر کے لیے بھی بڑا چیلنج ہے قابض اسرائیلی فوج آئے روز قبلہ اول کی بے حرمتی کا ارتکاب کرتی ہے اس کے آثار مٹانے کے لیے لگی ہوئی ہے

انہوں نےکہا کہ بد قسمتی سے عرب ممالک کے حکمران فلسطینیوں کے ساتھ کھڑے ہونے کی بجائے اسرائیل کے چوکیدار بننے جا رہے ہیں ان حالات میں پاکستان کا اپنے اصولی موقف پر قائم رہنا پاکستان کے قد کو بھی عالمی سطح پر اضافہ کرے گا اور مقدمہ کشمیر بھی مضبوط ہو گا پاکستان کی حکومت اور دینی سیاسی جماعتوں کو دوٹوک موقف اختیار کرنا چاہیے اس سے فلسطین میں حوصلے کا پیغام جائے گا

انہوں نے کہاکہ اسرائیل بھارت گٹھ جوڑ پاکستان کے خلاف ہے ہندوستان نے اسرائیل کے تعاون سے ہم پر جنگ مسلط کررکھی ہے سیز فائر لائن پر بلا اشتعال فائرنگ ہندوستان کی طرف سے کھلا اعلان جنگ ہے ہندوستان کے ان عزائم کو ناکام بنانے کے لیے قوم کے اندر جذبہ جہاد شوق شہادت پیدا کرنے کی ضرورت ہے جنگیں حوصلے عزم اور جذبہ جہاد سے جیتی جاتی ہیں ہم جس کی لاٹھی اس کی بھینس کے اصول کو تسلیم نہیں کرتے پوری قوم جہاد کی تیار ی کرے ۔