پی ٹی وی پر قومی وسیاسی جماعتوں کی نشر واشاعت سے انکارآئین پاکستان کی توہین ہے، محمد اصغر


لاہور:جماعت اسلامی پاکستان کے ڈپٹی سیکرٹری جنرل محمد اصغر نے پاکستان ٹیلی وژن کے چیئرمین نعیم بخاری کی جانب سے پی ٹی وی پر اپوزیشن کی کوریج نہ کرنے کے اعلان کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہاہے کہ پی ٹی وی ایک قومی ادارہ ہے اس پر قومی جماعتوں کی سرگرمیوں اور نقطہ نظر کو پیش کرنے سے انکار کرنا آئین پاکستان  اور قانون کی توہین کرنے کے مترادف ہے ۔

اپنے بیان میں محمد اصغر نے کہاکہ نعیم بخاری نے ماضی میں پرویز مشرف کو خط لکھا اور اعلیٰ عدلیہ کو مفلوج کروا کے ملک کو آئینی بحران میں مبتلا کیا ۔ اب وہ حکومت کی مخالفانہ رائے کے ابلاغ کی مخالفت کر کے جمہوریت کا جنازہ نکالنے لگے ہیں ۔

انہوں نے کہاکہ ایک ایسا شخص جو صرف وکیل اور اینکر پرسن رہا ہو ، اس کے تجربہ کو براڈ کاسٹنگ کا تجربہ قرار دے کر ریاست کے ایک اہم ستون پر متمکن کرنا موجودہ حکومت کی متعصبانہ پالیسی کی دلیل ہے جس کا مقصد آمریت کو فروغ دینا ہے ۔ محمد اصغر نے کہاکہ ہم حکومت کو مشورہ دیتے ہیں کہ 75 سالہ نعیم بخاری کو پہلے کسی اکیڈمی میں تربیت دی جائے تاکہ وہ کسی پارٹی کے مفادات کے بجائے قومی مفاد ات کی نگہبانی کریں ۔