نواز شریف کے ساتھ وہی ہوگا جو الطاف حسین کے ساتھ ہوا،شیخ رشید


لاہور: وفاقی وزیر شیخ رشید نے کہاہے کہ طبلِ جنگ بج چکا ہے،نواز شریف کھل کر سامنے آگئے، ان کے ساتھ وہی ہوگا جو الطاف حسین کے ساتھ ہوا ہے، نواز شریف کا لندن سے سیاسی جنازہ آئے گا، بھارت میں بانی ایم کیو ایم کو وہ کوریج نہیں ملی جو نوازشریف کو ملی،(ن)لیگ بھارت سے پیسے لے کر انتشار پھیلانا چاہتی ہے۔

لاہور میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے وفاقی وزیر شیخ رشید نے کہا کہ نواز شریف اشتہاری مجرم ہیں، گزشتہ روز انہوں نے 11 بار قمر جاوید باجوہ کا نام لیا، پاکستان میں جمہوریت فوج کی بدولت ہے، پاک فوج ملک میں امن واستحکام کی ضامن ہے، یہ اداروں میں تصادم چاہتے ہیں، اب نوازشریف کی سیاست دوبارہ پاکستان میں نہیں آئے گی، بلکہ ان کا سیاسی جنازہ ہی لندن سے آئے گا.

وزیر ریلوے نے کہا کہ پاکستان کا کوئی آرمی چیف ایسا نہیں رہا جس سے نواز شریف نے ٹکرا ئونہ کیا ہو، نواز شریف کھل کر سامنے آگئے، اب ان سے کھل کر سیاست ہوگی، نون لیگ ٹوٹ کر رہے گی اور کوئی وجہ نہیں نون سے شین نہ نکلے۔ واضح الفاظ میں کہہ رہا ہوں31دسمبر سے 20فروری تک آپ کے 15 لوگ آپ کی جماعت چھوڑ جائیں گے۔

شیخ رشید نے مزید کہا کہ نوازشریف وہ کھیل کھیل رہے ہیں جو عالمی ایجنڈا ہے، انہیں اندازہ ہی نہیں یہ کیا کھیل کھیل رہے ہیں، نوازشریف بانی ایم کیو ایم ٹو بن گئے ہیں، اعلانِ جنگ ہوچکا ہے، طبلِ جنگ بج چکا، نوازشریف کے ساتھ وہی ہوگا جو الطاف حسین کے ساتھ ہوا ہے ۔

شیخ رشید کا کہنا تھا کہ نوازشریف اشتہاری مجرم ہیں، ان کا ایک نکاتی ایجنڈا تھا کہ مریم کو لندن آنے دیا جائے، ان کی تقریر کو بھارت میں دکھایا گیا، بھارت میں بانی ایم کیو ایم کو وہ کوریج نہیں ملی جو نوازشریف کو ملی،(ن)لیگ بھارت سے پیسے لے کر انتشار پھیلانا چاہتی ہے، اگر نوازشریف کا یہی رویہ رہا تو اگلے 5 سال بھی عمران خان کی حکومت ہوگی۔

وفاقی وزیر نے کہا کہ اپوزیشن جماعتوں نے ایک ماہ سے میڈیا کو مصروف رکھا اور گزشتہ روز ہونے والے جلسے پر اربوں روپے خرچ کیے گئے، لیکن پھر بھی پی ڈی ایم کا جلسہ ناکام ترین جلسہ تھا، 18 شہروں سے صرف 20 سے 22 ہزار لوگوں کو جمع کیا جاسکا، جلسوں سے حکومتیں نہیں جاتیں، زندگی میں بے نظیر اور عمران خان کا جلسہ بہت بڑا تھا۔

شیخ رشید نے کہا کہ گزشتہ روز کے جلسے میں نوازشریف کی تقریر نہیں سن سکا سوگیا تھا، کورونا کے بعد 6ماہ صحت مند ہونے میں لگتے ہیں، آج کل طبیعت ٹھیک نہیں دواکھا رہا ہوں۔ان کا کہنا تھا کہ جلسوں سے حکومتیں نہیں جاتیں، اگر جلسوں سے جانا ہوتا تو ہم نے ٹکا کر 126 دن جلسوں میں لگائے، عمران خان کے مینار پاکستان جلسے سے کوئی نہیں گیا۔