مقبوضہ کشمیر میں عید الاضحی کل منائی جائے گی


سری نگر: مقبوضہ کشمیر میں عید الاضحی کل ( بدھ کے روز) منائی جائے گی ۔ بھارتی حکومت نے  جموں وکشمیر میں عید الاضحی کی نماز پر پابندی لگا دی ہے جس کے باعث کشمیری عوام سخت مایوس اور بے چینی کا شکار ہیں ۔کورونا وائرس کے نام پر جموں وکشمیر میں گذشتہ عیدیں یعنی عید الفطر اور عید الاضحی کی اجتماعی نماز ادا کرنے پر پابندی عائد تھی۔ اس دفعہ بھی پابندی کو برقرار  رکھا گیا ہے ۔

اتوار کو  کمشنر پنڈورنگ پولے نے بتایا کہ عید الاضحی کی اجتماعی نماز کورونا وائرس کے پس منظر ادا کرنے کی اجازت نہیں دی جائے گی۔ادھر کشمیر پولیس زون کے انسپکٹر جنرل وجے کمار نے کہا کہ کہ عید الاضحی کے موقع پر کووڈ ایس او پیز پر سختی سے عمل کریں۔

 پانچ اگست 2019 میں کے بعد پابندیوں کی وجہ سے بھی عید الفطر اور الاضحی کے اجتماعات نہیں ہو پائے تھے ۔اگرچہ جموں و کشمیر میں لاک ڈاون میں نرمی دی جاچکی ہے جسکے تحت بازار اور آمد ورفت پر پابندی ہٹا دی گئی ہے۔ تاہم تعلیمی ادارے اور بڑے مذہبی اجتماعات پر پابندی لگاتار جاری ہے۔ ماضی میںعید کے روز بڑے اجتماعات ہوتے تھے جن میں ہزاروں مسلمان نماز و دعائوں میں شامل ہوتے تھے۔