جعلی اکاؤنٹس کیس،مراد علی شاہ پر فردِ جرم عائد کرنے کی تاریخ 30جون مقرر


اسلام آباد: اسلام آباد کی احتساب عدالت نے جعلی بینک اکاؤنٹس کیس، نوری آباد پاور پلانٹ کے غیر قانونی ٹھیکوں اور مبینہ منی لانڈرنگ کے ریفرنس میں وزیرِ اعلی سندھ مراد علی شاہ اور دیگر ملزمان پر فردِ جرم عائد کرنے کیلئے 30 جون کی تاریخ مقرر کر دی۔

اسلام آباد کی احتساب عدالت کے جج اصغر علی نے وزیراعلی سندھ مراد علی شاہ کے خلاف جعلی اکائونٹس کیس میں دائر ریفرنس کی سماعت کی، اس موقع پر مراد علی شاہ کی عدالتی حاضری سے ایک روزہ استثنیٰ کی درخواست پیش کی گئی جس کو عدالت نے منظور کرلیا۔

سماعت کے دوران نیب پراسیکیوٹر نے کہا کہ شریک ملزم محمد علی بیرون ملک روپوش ہے جس پر احتساب عدالت کے جج نے محمد علی کو اشتہاری قرار دیتے ہوے دائمی وارنٹس جاری کرنے کا حکم دیتے ہوئے کہا کہ محمد کا نام ای سی ایل میں ڈالنے سمیت شناختی کارڈ بلاک کیا جائے جب کہ آئندہ سماعت پر تمام ملزمان عدالت میں پیش ہوں۔

احتساب عدالت نے آئندہ سماعت پر نوری آباد پاور پلانٹ ریفرنس میں وزیراعلی سندھ مراد علی شاہ پر فرد جرم عائد کرنے کے لیے 30 جون کی تاریخ مقرر کرتے ہوئے کیس کی سماعت ملتوی کردی۔عدالت نے وزیرِاعلی سندھ مراد علی شاہ سمیت تمام ملزمان کو آئندہ سماعت پر حاضری یقینی بنانے کی ہدایت کر دی۔