پاکستانی کوہ پیما شہروز کاشف نے ماونٹ ایورسٹ سرکر کے تاریخ رقم کردی


اسلام آباد :پاکستانی کوہ پیما شہروز کاشف نے دنیا کی بلند ترین چوٹی ماونٹ ایورسٹ سر کر کے تاریخ رقم کر دی۔دنیا کی بلند ترین چوٹی  ماونٹ ایورسٹ پر پاکستان کا سبز ہلالی پرچم لہرا دیا گیا ۔ انیس سالہ کوہ پیما  شہروز کاشف نے ماونٹ ایورسٹ سر کر لی۔

شہروز کاشف ماونٹ ایورسٹ سر کرنے والے دنیا کے چوتھے جبکہ پاکستان کے پہلے کم عمر کوہ پیما  بن گئے۔کوہ پیما شہروز 22 مارچ کو ماونٹ ایورسٹ سر کرنے کے لیے پاکستان سے نیپال روانہ ہوئے تھے جبکہ 6 اپریل کو بلند ترین چوٹی  کے لیے اپنی سمٹ کا آغاز کیا تھا اور منگل کو آٹھ ہزار آٹھ سو اڑتالیس میٹر بلند چوٹی کو سر کرنے کا کارنامہ انجام دیا ۔

شہروز کاشف سترہ سال کی عمر میں دنیا کی 12 ویں بلند ترین چوٹی براڈ پیک پر بھی پاکستانی پرچم لہرا  چکے ہیں۔ شہروز کاشف نے منفرد ریکارڈ قائم کرنے کے ساتھ  پوری دنیا میں  براڈ بوائے کے نام  سے اپنی  الگ شناخت بھی بنائی۔شہروزکاشف  نے اپنی کامیابی معروف پاکستانی کوہ پیما علی سدپارہ کے نام کرنے کا اعلان کر دیا۔