شاہد خاقان عباسی کی اسمبلی رکنیت معطل ہونے کا امکان


اسلام آباد: سپیکر قومی اسمبلی کو دھمکی دینے کے الزام میں سابق وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی کی اسمبلی رکنیت معطل ہونے کا امکان ہے۔

نجی ٹی وی  کے مطابق سابق وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی نے اسپیکر کے شوکاز نوٹس کا تاحال جواب نہیں دیا۔شاہد خاقان عباسی کو اسپیکر کو جوتا مارنے کی دھمکی اور نازیبا الفاظ پر نوٹس جاری کیا گیا تھا۔قومی اسمبلی سیکرٹریٹ کے مطابق 7 دن میں شاہد خاقان عباسی نے جواب دینا تھا لیکن 10 دن سے زیادہ ہو گئے شاہد خاقان عباسی نے جواب نہیں دیا ۔

یہ بھی پڑھیں: سپیکرقومی اسمبلی فریق بن چکے ، مجھے انکی کسی بات پر اعتماد نہیں،شاہد خاقان

سپیکر قومی اسمبلی اسد قیصرنے کہا کہ معاملے کو ایسے نہیں چھوڑیں گے منطقی انجام تک پہنچایا جائے گا۔ شاہد خاقان عباسی کے بارے میں فیصلہ قومی اسمبلی کے آئندہ اجلاس میں ہو گا۔اسپیکر شاہد خاقان عباسی کو معطل کرنے کرکے ایوان میں داخلے پر کچھ روز پابندی لگا سکتے ہیں۔

واضح رہے کہ ایک اجلاس کے دوران شاہد خاقان عباسی نے سپیکر کو جوتا مارنے کی بات کی تھی جس پر سپکر نے شوکاز نوٹس بھجوایا تھا تا ہم ابھی تک اسکا جواب نہیں دیا گیا۔ذرائع کے مطابق اسپیکر قومی اسمبلی شاہد خاقان عباسی کو معطل کر کے ایوان میں داخلے پر کچھ روز پابندی لگا سکتے ہیں۔