مقبوضہ کشمیر میں پی آئی اے طیارے جیسا غبارہ اترنے پر بھارتی فوج کی دوڑیں


 سری نگر: مقبوضہ جموں وکشمیر میں پی آئی اے کے جہاز کی شکل کا غبارہ ملنے پر بھارتی فوج بوکھلاہٹ کا شکار ہوگئی۔جاسوس کبوتر کی گرفتاری کا دعوی کرنے کے بعد بھارت کی ایک اور بد حواسی سامنے آگئی۔

بھارتی میڈیا کے مطابق مقبوضہ کشمیر کے ضلع کٹھوا میں ایک طیارے کی شکل کا غبارہ گرا جس پر پی آئی اے لکھا ہوا ہے اور سبز رنگ کے ساتھ چاند ستارا بھی بنا ہوا ہے۔یہ غبارہ ہیرانگر سیکٹر کے سوترا چک گاؤں سے ملا جس پر بھارتی پولیس کی دوڑیں لگ گئیں اور انہوں نے اس میں جاسوسی کے آلات ڈھونڈنے شروع کردئیے۔ بھارتی پولیس نے اب اس غبارے کو تحویل میں لے کر اس پر مزید تحقیقات شروع کردی ہیں۔

اس سے قبل بھارتی سیکیورٹی فورس سرحد پر پاکستانی جاسوس کبوتر پکڑنے کا دعوی بھی کرچکی ہیں۔ قابض بھارتی فوج جھنجھلاہٹ اور بدحواسی میں ایسے بے سر و پا الزامات لگاتی ہے جس سے پوری دنیا میں ان کا خود مذاق بنتا ہے۔2015میں بھی پٹھان کوٹ کے علاقے سے کبوتر کو پکڑ کر پاکستانی جاسوس قرار دے دیا گیا تھا۔

اس خود ساختہ جرم کی پاداش میں کبوتر کے پر بھی کاٹ دیئے گئے تھے۔سب سے مضحکہ خیز صورت حال اس وقت سامنے آئی تھی جب 2017 میں بھارتی پولیس نے بڑی تگ و دو کے بعد ایک کبوتر کو حراست میں لے لیا تھا اور اس پر بھی جاسوسی کا الزام عائد کیا گیا تھا تاہم سرحدی محافظوں کی نااہلی سے در انداز کبوتر فرار ہونے میں کامیاب ہوگیا تھا۔