وزیراعظم کی ذخیرہ اندوز و منافع خوروں کے خلاف سخت کاروائی کی ہدایت

انٹرنیٹ فوٹو

اسلام آباد:وزیر اعظم عمران خان نے ایک بار پھر۔ذخیرہ اندوزی اور منافع خوروں کے خلاف سخت ترین کاروائی کی ہدایت کردی۔

وزیر اعظم کی زیر صدارت اشیا ضروریہ کی قیمتوں اور دستیابی کے حوالے سے جائزہ اجلاس ہوا۔اجلاس میں وفاقی وزرا کے علاوہ  چیف سیکریٹری بنجاب اور خیبر پختونخوا  ویڈیو لنک سے شریک ہوئے ۔وزیر اعظم کو ملک میں گندم کی اگلے مالی سال 22-2021 کی پیداوار، کھپت اور ضروریات کے تخمینوں کے بارے تفصیلی بریفنگ دی گئی۔ وزیر اعظم نے کہا کہ مستقبل کی ضروریات اور کسی بھی ہنگامی صورتحال سے نمٹنے کے لیے ابھی سے جامع منصوبہ بندی کی جائے۔ذخیرہ اندوزی اور منافع خوروں کے خلاف سخت ترین قانونی اقدامات اٹھائے جائیں ۔

وزیر اعظم نے  ہدایت کی کہ کوشش کی جائے کہ غریب آدمی پر مزید کسی قسم کا اضافی بوجھ نہ پڑے۔ صوبوں کے مابین روابط مزید مستحکم کیے جائیں تاکہ قیمتوں میں فرق ختم کیا جا سکے۔ کھیت سے مارکیٹ تک منتقلی اور تمام دیگر عوامل میں انفارمیشن ٹیکنالوجی کا استعمال عمل میں لایا جائے تاکہ سسٹم کو شفاف بنایا جا سکے اور کسان اور صارفین دونوں کو اچھی قیمت مل سکے۔ وزیر اعظم نے ہدایت کی کہ خورد ونوش کی اشیا کے لیے جدید خطوط پر ذخیرہ کرنے کے لیے گوداموں کی تعداد بڑھائی جائے ۔