جموں وکشمیر سمیت انسانی حقوق اور بنیادی آزادیوں کے فروغ کیلئے کوششیں جاری رکھیں گے،یوسف بن احمدالاتھمین 


جنیوا:اسلامی تعاون تنظیم(او آئی سی)کے سکریٹری جنرل ڈاکٹر یوسف بن احمدالاتھمین    نے جموں و کشمیر سمیت انسانی حقوق اور بنیادی آزادیوں کے فروغ اور تحفظ کے لئے کوششیں جاری رکھنے کے او آئی سی کے عزم کا اعادہ کیا ہے۔

او آئی سی کے سیکریٹری جنرل نے یہ بات اقوام متحدہ کی انسانی حقوق کونسل (یو این ایچ آر سی) کے جنیوا میں جاری 46 ویں اجلاس کے اعلی سطحی سیشن سے اپنے خطاب میں کہی۔ انسانی حقوق کونسل کا22 فروری کو شروع ہونے والا اجلاس 23 مارچ تک آن لائن جاری رہے گا۔

او آئی سی سیکریٹری جنرل نے کہا یہ اجلاس ایک ایسے وقت میں ہورہا ہے جب دنیا کو امن ، سلامتی ، انسانی حقوق اور ترقی کے حوالے سے متعدد چیلنجوں کا سامنا ہے۔ انہوں نے کہا کہ کورونا کی وبائی بیماری کا زندگی کے تمام پہلوؤں خاص طور پر انسانی حقوق پر گہرا اثر پڑا ہے اور اس مرض نے معاشرتی عدم مساوات اور خطرے کو بڑھا دیا ہے۔

آسیہ اندرابی کو جیل میں رکھنا غیرانسانی و غیرقانونی ہے، او آئی سی

او آئی سی کے سیکرٹری جنرل نے اسرائیل کی طرف سے فلسطینی عوام کے خلاف انسانی حقوق کی بڑے پیمانے پر ہونے والی خلاف ورزیوں،بھارت کے غیر قانونی زیر قبضہ مقبوضہ جموں و کشمیر میں انسانی حقوق کی صورتحال ، آذربائیجان کے ناگورنو کارابخ میں تنازعہ کے بعد بحالی اور تعمیر نو اور روہنگیا سمیت اسلامی تعاون تنظیم کے غیر رکن ملکوں میں مسلمانوں کو درپیش صورتحال پر بھی روشنی ڈالتے ہوئے اس بات پر زور دیا کہ او آئی سی متعصب اور امتیازی قوں کو شکست دینے کیلئے مختلف ثقافتوں اور مذاہب کے مابین مکالمہ کو فروغ دینے کے لیے تمام پلیٹ فارمز کا استعمال جاری رکھے گی۔